آدھا لاہور سیل، شہر کے 61 مقامات 14 دن کیلئے مکمل بند

Share this story

لاہور: کورونا وبا بے قابو ہونے پر صوبائی دارالحکومت لاہور سمیت پنجاب کے 7 اور ملک بھر کے 20 شہروں میں سمارٹ لاک ڈاؤن، لاہور کے 21 علاقوں کی 61 گلیاں، محلے اور بلاکس بند کر دئیے گئے۔

 کورونا وائرس کے باعث لاہور کے جن علاقوں کو بند کیا گیا ہے کہ رام نگر، بلال پارک، قلعہ گجر سنگھ کی عبدالکریم روڈ، عثمانیہ کالونی اور رائل پارک شامل ہیں۔

کریم پارک کے بلاک نمبر 2، 3، 4 اور امین پارک کی گلی نمبر 1 کو بھی بند کر دیا گیا ہے۔ تاجپورہ کی گلی نمبر 4 اور نظام آباد ای بلاک کی گلی نمبر 1 کو مکمل طور پر سیل کیا جا چکا ہے۔ 

تاجپورہ شاہ عالم کالونی کی گلی نمبر 2، علی محمد پارک کی گلی 3 بھی بند کر دی گئی ہے جبکہ جوہر ٹاؤن کے بلاک بی، ایف 2، جے 2 اور بلاک جی 3 کو بند کر دیا گیا ہے۔

کنال ویو سوسائٹی کے بلاک بی، واپڈا ٹاؤن کے بلاک ایف 2، گلبرگ اے کا بلاک 3، بندو خان سویٹس تا مسجد طلحہ تک بند کر دیا گیا ہے۔ گلبرگ اے میں ہی ندیم تکہ تا طارق کباڑیا تک کے علاقے میں مکمل لاک ڈاؤن ہوگا۔

گلبرگ بلاک بی 1، بلاک بی 2 اور بلاک بی 3 مکمل طور پر بند کر دیئے گئے ہیں۔ شاد باغ کی گلی نمبر 2، بیگم کوٹ شمع کالونی کی گلی 4 کو سیل کر دیا گیا ہے۔

بارہ دری معصوم شاہ روڈ کی گلی نمبر 2 بھی سربمہر کر دی گئی ہے۔ ڈی ایچ اے فیز 1 اور فیز 5 کے تمام سیکٹرز میں سمارٹ لاک ڈاؤن نافذ العمل ہوگا۔ عسکری 10 مکمل طور پر جبکہ کیولری گراؤنڈ کا شیراز ولاز سیل کر دیا گیا ہے۔

گلستان کالونی کی گلی نمبر 26,15,13,11,9,8,5 اور 27 بھی بند کر دی گئی ہے۔ جنرل ہسپتال کے پیچھے قائد ملت کالونی کچا جیل روڈ سیل کر دیا گیا
ہے۔

غوثیہ کالونی، الحمد کالونی اور طارق کالونی بھی آمدورفت کے لیے بند ہو گئی۔ سراج پورہ اور بلال کالونی، جلو موڑ دھوبی محلہ اور باٹا پور کا علاقہ بھی سیل ہے۔

بسم اللہ ہاؤسنگ سکیم جی ٹی روڈ، مناواں کا بلاک اے اور بلاک بی سربمہر کر دیا گیا ہے۔ حسین پورہ کوٹھی سٹاپ بالمقابل بسم اللہ ہاؤسنگ سکیم میں لاک ڈاؤن جبکہ ایک مینار والی مسجد نزد لاثانی فارمیسی مناواں کا علاقہ بھی بند کر دیا گیا ہے۔ 

خیال رہے پاکستان میں کورونا کے متاثرین تیزی سے بڑھنے لگے، ملک بھر میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز کی تعداد ایک لاکھ 48 ہزار 921 تک پہنچ گئی جبکہ ایک دن میں 111 افراد جاں بحق ہوگئے جس کے بعد اموات کی تعداد 2 ہزار 839 ہوگئی۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 4 ہزار 443 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، پنجاب میں 55 ہزار 878، سندھ میں 55 ہزار 581، خیبر پختونخوا میں 18 ہزار 472، بلوچستان میں 8 ہزار 327، گلگت بلتستان میں ایک ہزار 143، اسلام آباد میں 8 ہزار 857 جبکہ آزاد کشمیر میں 663 کیسز رپورٹ ہوئے۔

ملک بھر میں اب تک 9 لاکھ 22 ہزار 665 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 25 ہزار 15 نئے ٹیسٹ کئے گئے، اب تک 56 ہزار 390 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ کئی مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔

پاکستان میں کورونا سے ایک دن میں 111 افراد جاں بحق ہوگئے جس کے بعد وائرس سے مرنے والوں کی تعداد 2 ہزار 839 ہوگئی۔ پنجاب میں ایک ہزار 81، سندھ میں 853، خیبر پختونخوا میں 707، اسلام آباد میں 83، گلگت بلتستان میں 17، بلوچستان میں 85 اور آزاد کشمیر میں 13 مریض جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔

ادھر چیف سیکرٹری پنجاب جواد رفیق ملک کی سربراہی میں اہم اجلاس میں لاہور کے علاوہ 7 شہروں میں لاک ڈاؤن کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ گوجرانوالہ، فیصل آباد، سیالکوٹ، گجرات، ملتان، ڈی جی خان اور راولپنڈی کے علاقوں کو کل سے سیل کیا جائے گا۔

جواد رفیق ملک نے ضلعی انتظامیہ کو ایکشن کرنے کے احکامات جاری کر دیئے ہیں۔ دیگر شہروں کے ڈپٹی کمشنر اپنے کمشنر کے ذریعے علاقوں کی نشاندہی کرکے کل صبح دس بجے فہرستیں ارسال کریں گے۔

Source Dunya News

Share this story

Leave a Reply