بیت اللہ کے صحن میں طواف کا عمل روک دیا گیا

Share this story

سعودی حکومت نےکروناوائرس سے بچاؤ  اور دنیا بھر سے آنے والے عمرہ زائرین کی حفاظت کے پیش نظر بیت اللہ میں عمرے کا  سلسلہ عارضی طور پر روک دیا ہے اور کسی بھی شخص کے لئے بیت اللہ کے صحن میں طواف کی اجازت  بند کر دی ہے،سعودی حکومت کی طرف سے عمرے کی   بندش کایہ حکم سعودی شہریوں اور سعودی عرب میں موجود غیر ملکیوں دونوں کے لیےہے،جس  کے بعد  تاریخ میں ایک بار پھربیت اللہ کے صحن  میں طواف کا عمل روک دیا گیا ہے تاہم مکہ مکرمہ میں موجود زائرین بیت اللہ کی بالائی منزلوں پرطواف جیسی مقدس عبادت میں مصروف ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سعودی حکومت نے دنیا بھر میں پھیلنے والی موذی بیماری کرونا وائرس سے بچاؤ کے لئے احتیاطی قدم اٹھاتے ہوئے   مکہ مکرمہ میں عمرے کا سلسلہ عارضی طور پر روک دیا ہے جبکہ بیت اللہ کے صحن میں طواف کا سلسلہ بھی عارضی طور پر مکمل بند کر دیا گیا ہے تاہم بیت اللہ میں موجود زائرین بالائی منزلوں پر طواف کرتے ہوئے دیکھے جا سکتے ہیں۔اس سے قبل گذشتہ ماہ 27 فروری کو سعودی حکومت نے کرونا  وائرس سے بچاؤ کے لئے عارضی طور پر دنیا بھر سے ارضِ حرمین میں آنے والے عمرہ زائرین کو ویزوں  کا اجراء بند کردیا تھا  تاہم مکہ مکرمہ اور گرد ونواح میں موجود سعودی اور غیر ملکی شہریوں کو عمرے اور بیت اللہ کےطواف کی اجازت دی گئی تھی ،سعودی حکومت نے ایک ہفتے کے بعد بیت  اللہ میں عمرے اور طواف جیسی عظیم عبادت کو عارضی طور مکمل بندکر دیا ہے  اور کسی بھی شخص کو عمرے یا طواف کی اجازت نہیں دی جارہی ۔عمرے اور طواف کی  بندش کے بعد بیت اللہ کے خدام اللہ کے گھر کی صفائیوں اور  کرونا   وائرس سے بچاؤ کے لئے سکریننگ کا عمل جاری رکھے ہوئے ہیں ۔

Share this story

Leave a Reply