متحدہ عرب امارات میں ملازمت سے محروم ہو جانے والے پاکستانی تارکین وطن کے معاملے کو حل کر لیا گیا

Share this story

پاکستان اور متحدہ عرب امارات نے جمعرات کے روز کورونا وائرس کی وبا کے نتیجے میں ملازمت سے محروم ہو جانے والے پاکستانی تارکین وطن کے معاملے کو حل کرنے کا عزم کیا۔ دونوں ممالک نے امارات میں مقیم پاکستانیوں کی ملازمتوں کی بحالی کے مختلف امکانات پر تبادلہ خیال کیا۔

اوورسیز پاکستانیز اینڈ ہیومن ریسورس ڈویلپمنٹ وزارت کی جانب سے جاری کردہ ایک نیوز ریلیز میں کہا گیا ہے وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے اوورسیز پاکستانیز سید ذوالفقار عباس بخاری اور متحدہ عرب امارات کے وزیر برائے انسانی وسائل اور امارات نصیر بن ثانی جمعہ الحملی کے مابین ملاقات کے دوران اس ماملے کے اثرات اور تدارک  کے طریقہ کار پر گفتگو ہوئی۔ دونوں رہنماؤں نے متحدہ عرب امارات سے پاکستانی افرادی قوت کی بحفاظت وطن واپسی کے طریقوں پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے بین وزارتی تعاون کو بڑھانے پر اتفاق کیا۔

سید ذوالفقار عباس بخاری نے دو روزہ دورے پر آئے متحدہ عرب امارات کے وزیر کا اس طرح کے مشکل وقت میں پاکستان کو بروقت مدد فراہم کرنے پر شکریہ ادا کیا۔ نصیر بن ثانی نے دونوں برادر ممالک کے مابین دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے کے عزم کا اظہار کیا۔ انہوں نے سید ذوالفقار عباس بخاری کو یقین دہانی کرائی کہ متحدہ عرب امارات کی حکومت پاکستانی کارکنوں کے لئے ملازمت کا مواقع یقینی بنائے گی اور ان کے حقوق کا تحفظ کرے گی۔

سید ذوالفقار عباس بخاری نے اجلاس کے بعد ٹویٹ کیا کہ “ایکسیلنسی ناصر بن ثانی الحملی آپ کی مددکا شکریہ۔ کویڈ ۔19 کے دوران آپ کی مدد پاکستانی مزدوروں کی مشکلات کو دور کرنے میں خاطر خواہ رہی ہے“۔ انہوں نے اپنے ٹویٹ میں مزید کہا کہ “آپ کی اس کاوش کا میرے وزیر اعظم کے دل میں بھی احترم ہے، میں اپنے بھائی چارے کے تعلقات کو جاری رکھنے اور مل کر کام کرنے کا منتظر ہوں۔”

Share this story

Leave a Reply