کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کیلئے قوم بدھ کو یوم استحصال منائیگی

Share this story

قوم غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں فوجی محاصرے کا ایک سال مکمل ہونے پر کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کیلئے کل(بدھ) یوم استحصال منائے گی۔

گزشتہ سال پانچ اگست کو نریندر مودی کی حکومت نے بھارت کے غیرقانونی زیرقبضہ جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کردی تھی۔

کشمیری عوام کیخلاف بھارت کے یکطرفہ،غیر قانونی اقدامات اور بھارت کے غیرقانونی زیرقبضہ جموں و کشمیر میں بھارتی فوج کے مظالم کی مذمت کیلئے متعدد تقریبات کا اہتمام کیاگیا ہے۔

وزیر اعظم عمران خان کل آزاد جموں و کشمیر کی قانون ساز اسمبلی سے خطاب کریں گے جس میں کشمیریوں کے نصب العین کیلئے پاکستان کی حمایت کا اعادہ کیا جائے گا۔

وفاقی دارالحکومت سمیت تمام بڑے شہروں میں ایک میل لمبی یکجہتی واک کااہتمام کیا جائے گا۔

صدر عارف علوی اسلام آباد میں واک کی قیادت کریں گے۔

واک کے شرکا بازوں پر سیاہ پٹیاں باندھیں گے او ر پاکستان اور آزاد کشمیر کے پرچم لہرائیں گے۔

ملک بھر میں ایک منٹ کی خاموشی اختیارکی جائے گی۔ایک منٹ کیلئے ٹریفک روک جائے گی اور سائرن بجائے جائیں گے۔

ایک منٹ کی خاموشی ختم ہونے کے فوراً بعد ٹیلی ویژن چینلوں اور ریڈیو پر پاکستان اور آزاد جموں و کشمیر کے قومی ترانے چلائے جائیں گے۔

کل سینٹ کا خصوصی اجلاس طلب کیاگیا ہے جس میں کشمیری عوام کو ان کی منصفانہ جدوجہدکے حصول کیلئے دی گئی قربانیوں پر بھرپور خراج تحسین پیش کیا جائے گا۔

 

Share this story

Leave a Reply