Share this story

ترکی کی اعلٰی ترین عدالت نے تاریخی یاد گار آیا صوفیہ کو مسجد میں تبدیل کیے جانے سے متعلق فیصلہ 15 دن کے لیے مؤخر کردیا ہے۔

سن 1985 میں یونیسکو کی ‘عالمی تاریخی مقامات’ کی فہرست میں شامل ہونے والا آیا صوفیہ بنیادی طور پر آرتھوڈوکس گرجا گھر تھا جسے بعد ازاں 1453ء میں فتح قسطنطنیہ کے بعد خلافتِ عثمانیہ کے دور میں مسجد میں تبدیل کردیا گیا تھا۔ ترک انقلاب کے بعد 1930 کی دہائی میں اتاترک نے اس کی گرجے و مسجد کی حیثیت ختم کرکے عجائب گھر بنادیا، جس کے بعد سے یہاں عبادت پر پابندی عائد ہے۔

ایا صوفیہ ترکی کے شہر استنبول میں واقع ہے اور بلاشک و شبہ دنیا کی تاریخ کی عظیم ترین عمارتوں میں شمار کیا جاتا ہے۔

Share this story

Leave a Reply