مختلف ممالک کا کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کی کوشش کے تناظر میں اپنی سرحدوں کو بند کرنے کا فیصلہ‎

Share this story

مختلف عالمی ممالک نے کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کی کوشش کے تناظر میں اپنی سرحدوں کو بند کرنے ، داخلی راستوں پر سخت پابندیاں عائد کرنے ، قرنطینہ کی ضروریات پوری کرنے اور بڑے اجتماعات پر پابندی لگانے کا فیصلہ کیا ہے۔

عالمی ادارہ صحت نے یورپ کو دنیا کے باقی ممالک کے مقابلے میں کرونا وائرس کے مزید کیسز سامنے آنے اور اس سے ہونے والی اموات کی اطلاعات کے بعد اس جان لیوا وباء کاموجودہ مرکز قرار دے دیا ہے۔

امریکہ اور سپین اپنے ملکوں میں ہنگامی حالت کا اعلان کرچکے ہیں۔

ڈنمارک کے وزیراعظم Metle Frederik Sen نے آج سے آئندہ ماہ کی تیرہ تاریخ تک اپنے باشندوں اور شہریوں کے سوا ہر طرح کی قومیت کے لوگوں کیلئے اپنی سرحدیں بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

برطانیہ میں کرونا وائرس کی وجہ سے مقامی اور میئر کے انتخابات ملتوی کردیئے گئے ہیں۔

یونان نے شمالی اٹلی کو جانے والی اور وہاں سے تمام پروازوں کی آمدورفت کو اس ماہ کی تئیس تاریخ تک معطل رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

نیوزی لینڈ کی وزیراعظمJacinda Ardern نے کہا کہ 30 جون تک کوئی کروز بحری جہاز نیوزی لینڈ میں نہیں آئے گا۔

روس کے وزیراعظم Mikhael Mishustin نے پولینڈ اور ناروے کے ساتھ اپنی ملحقہ سرحدوں کو غیر ملکیوں کیلئے بند رکھنے کا اعلان کیا۔

نمیبیا نے جہاں کرونا کے دو کیسز کی اطلاعات ملی ہیں ، تیس دن تک تمام بڑے اجتماعات اور تین ملکوں کیلئے سفری پابندیاں عائد کرنے کا اعلان کیا ہے۔

Source

Share this story

Leave a Reply