سعودی شاہی خان کے 150 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے، غیر ملکی میڈیا کا دعویٰ

Share this story

فرمانروا شاہ سلمان اور ولی عہد محمد بن سلمان جدہ کے قریب ایک محفوظ علاقے میں منتقل، بیرون ملک سفر کرنے والے شہزادوں کی وجہ سے شاہی خاندان میں وائرس پھیلا: نیو یارک ٹائمز کی رپورٹ

تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس کی ہر طرف تباہ کاریاں جاری ہیں۔ کرونا وائرس سے جہاں عام لوگ اپنے آپ کو محفوظ نہ رکھ سکے وہیں سعودی شاہی خاندان کے 150 بھی کرونا وائرس کا شکار ہو گئے یہ بات سعودی شاہی خاندان کے بہت ہی قریبی نے غیر ملکی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے بتائی۔

نیو یارک ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق سعودی شاہی خان کے 150 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے، فرمانروا شاہ سلمان اقر ولی عہد محمد بن سلمان جدہ کے قریب ایک محفوظ علاقے میں منتقل ہوگئے، بیرون ملک سفر کرنے والے شہزادوں کی وجہ سے شاہی خاندان میں وائرس پھیلا۔ تفصیلات کے مطابق امریکی خبر رساں ادارے نیو یارک ٹائمز کی رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ کرونا وائرس سے سعودی شاہی خاندان پر بھی حملہ کیا ہے۔ 

دعویٰ کیا گیا ہے کہ سعودی عرب کی ایک اعلی شاہی شخصیت ریاض کے گورنر شہزادہ فیصل بن بندر بن عبدالعزیز کرونا وائرس کا شکار ہوئے ہیں اور ان کی حالت اس وقت تشویش ناک ہے۔ اسی باعث انہیں انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں داخل کیا گیا ہے۔ 

مزید دعویٰ کیا گیا ہے کہ سعودی شاہی خاندان کے 150 کے قریب افراد کرونا وائرس میں مبتلا ہوچکے ہیں۔ اس تمام صورتحال میں سعودی فرمانروا اور ولی عہد جدہ کے قریب محفوظ جزیرے پر منتقل ہو گئے ہیں۔

جبکہ سعودی شاہی خاندان کے لئے مخصوص شاہ فیصل ہسپتال میں مزید 500 وی آئی پی بیڈز کا انتظام کر لیا گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ ممکنہ طور پر شاہی خاندان میں کرونا وائرس یورپ کا سفر کرنے والے شہزادوں کی وجہ سے پھیلا ہے۔ یہاں یہ واضح رہے کہ اس تمام معاملے کے حوالے سے سعودی حکومت اور شاہی خاندان تاحال خاموش ہیں۔ نیویارک ٹائمز کی رپورٹ کی تاحال نہ تصدیق کی گئی ہے، نہ تردید۔ 

جبکہ یہ بھی یاد رہے کہ دوسری جانب سعودی عرب کی وزارتِ صحت نے گذشتہ 24 گھنٹے میں کرونا وائرس کی355 نئے کیسوں کی تصدیق کی ہے۔ مملکت میں اب کل کیسوں کی تعداد 3287 ہوگئی ہے۔جبکہ کرونا وائرس کا شکار 666 افراد صحت یاب بھی ہوچکے ہیں۔ اس کے علاوہ مہلک وبا سے 44 ہلاکتیں ہوئی ہیں۔ اس صورتحال میں سعودی عرب کے 11 شہروں میں 24 گھنٹوں کا کرفیو نافذ کیا جا چکا ہے۔

Share this story

Leave a Reply