بڑا اپ سیٹ؛ حکومتی امیدوار کو شکست دے کر یوسف رضا گیلانی کامیاب

Share this story

قومی اسمبلی سمیت سندھ ، بلوچستان اور خیبر پختونخوا کی صوبائی اسمبلیوں میں سینیٹ کی 37 نشستوں کے لیے پولنگ کے بعد نتائج مکمل ہوچکے ہیں جب کہ اسلام آباد سے بڑا نتیجہ سامنے آیا جس کے مطابق سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی مدمقابل عبدالحفیظ شیخ  کو شکست دے کر سینیٹ جنرل نشست پر کام یاب ہوگئے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق پنجاب کی تمام 11 نشستوں پر امیدوار بلا مقابلہ منتخب ہوچکے ہیں جب کہ بدھ کو  اسلام آباد کی 2، سندھ کی 11 ، خیبر پختونخوا اور بلوچستان کی بارہ بارہ نشستوں پر ووٹنگ ہوئی۔ اس سلسلے میں  قومی اسمبلی سمیت تمام صوبائی اسمبلیوں کے ہال کو پولنگ اسٹیشن کا درجہ دیا گیا۔

سینیٹ انتخابات کا سب سے بڑا اپ سیٹ 

سینیٹ انتخابات میں اسلام آباد کی جنرل نشست پر حکومتی امیدوار وزیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ کو پی ڈی ایم کے امیدوار سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے شکست دے دی۔ نتیجہ آنے کے بعد عبدالحفیظ شیخ نے یوسف رضا گیلانی کو مبارک باد دی۔ یوسف رضا گیلانی نے 169 ووٹ حاصل کیے جب کہ حکومتی امیدوار حفیظ شیخ کو 164 ووٹ ملے،7 ووٹ مسترد ہوئے۔ اس طرح یوسف رضا گیلانی کو حکومتی امیدوار پر 5 ووٹوں کی برتری حاصل رہی۔

دوسری جانب خواتین کی نشست پر تحریک انصاف کی خاتون امیدوار فوزیہ ارشد نے ن لیگ کی فرزانہ کوثر کو13 ووٹوں سے شکست دے کر سینیٹ کی نشست جیت لی۔فوزیہ ارشد نے 174 ووٹ لے کر سینیٹ کی نشست پر کام یابی حاصل کی جبکہ مسلم لیگ ن کی فرزانہ کوثر نے ایک 161 ووٹ حاصل کئے جب کہ پانچ ووٹ مسترد ہوئے۔

حکومت نے اسلام آباد کا نتیجہ چیلنج کرنے کا اعلان کردیا

معاون خصوصی شہباز گل نے کہا کہ حکومت اسلام آباد سے سینیٹ الیکشن کا نتیجہ چیلنج کرے گی۔ اپنے ٹوئٹ میں ان کا کہنا تھا کہ  غیر حتمی طور پر 7 ووٹ مسترد ہوئے ۔ پانچ ووٹ کا فرق ہے۔  ابھی اس نتیجہ کو چیلنج کریں گے۔

ایک اور ٹوئٹ میں ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف  کی فوزیہ ارشد 13 ووٹوں سے جیت گئیں۔ایک ہی بیلٹ پیپر پر لوگوں نے پیسے سے ووٹ بیچا۔ خان سچا ثابت ہوا۔ ایک بار پھر الیکشن میں ووٹ فروخت ہوا-وڈیو آنے کے بعد یہ کلئیر ہو گیا تھا کہ گیلانی ٹبر ووٹ خرید رہا تھا۔ اگلی باری الیکشن کی بجائے ضمیروں کی  نیلامی کروا لیا کریں۔

بعدازاں قومی اسمبلی سے سینیٹ کی جنرل نشست پر آنے والے نتیجے کے بعد حکمران جماعت کے مشاورتی اجلاس میں وزیر اعظم نے ایوان سے اعتماد کا ووٹ لینے کا بھی اعلان کردیا۔

سینیٹ میں نئی پارٹی پوزیشن

ایوان بالا میں پاکستان تحریک انصاف 26 نشستوں کے ساتھ سب سے آگے، پیپلزپارٹی دوسری ، مسلم لیگ ن تیسری جبکہ بلوچستان عوامی پارٹی چوتھی بڑی جماعت بن گئی۔ سنیٹ میں نئی پارٹی پوزیشن کے مطابق حکمران اتحاد کو کل 47ارکان جبکہ اپوزیشن اتحاد کوسینٹ میں53 ارکان کی حمایت حاصل ہوگئی ہے۔

This article originally appeared on Express News

Share this story