زیادتی کے مجرم کو نامرد بنایا جاسکے گا، وفاقی کابینہ کا فیصلہ

Share this story

اسلام آباد، وفاقی کابینہ نے زیادتی کے مجرم کو نامرد بنانے سے متعلق اس کی مرضی کے حصول کی شرط قانون سے ختم کردی ۔ وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ زیادتی کیس کے مجرم کو عمر قید کے ساتھ ساتھ نامرد بنانے کی سزا بھی ہوسکے گی ۔

مجرم کو نوٹیفائیڈبورڈ کے ذریعے ریپ کے مجرم کو کیمیکل یا ادویات کے ذریعے نامرد بنایا جائے گا ۔ اس سے قبل ریپ کیسز سے متعلق مجوزہ قانون کے سیکشن 376 میں ریپ مجرم کو نامرد بنانےکےلیے اس کی  رضامندی کی شرط شامل تھی۔

نئے قانون کے مطابق تحقیقات میں کوتاہی برتنے اور ریپ کیسز میں غلط معلومات فراہم کرنے والے پولیس اور سرکاری ملازم کو تین سال کی سزا اور جرمانہ عائد کیا جاسکے گا ۔

Share this story