Jirga Pakistan

  • This topic is empty.
Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #12243
    Zaid
    Moderator

    پاکستان 17 سال بعد ایک بار پھر اپنے پاسپورٹ کو اپ گریڈ کرنے لگا ہے۔ 2004 میں مشین ریڈایبل پاسپورٹ لانچ کرنے کے بعد اب رواں برس یکم مئی سے ای پاسپورٹ کا آغاز کیا جا رہا ہے۔ اس سے ناصرف انسانی سمگلنگ روکنے میں مدد ملے گی بلکہ مسافروں کو بھی آسانی ہوگی۔

    ڈی جی پاسپورٹ کے مطابق ’ای پاسپورٹ میں موجود چپ کو جب ایئرپورٹ پر لگے ای گیٹس پر سکین کیا جائے گا تو اس میں موجود مسافر کی تمام معلومات سامنے آجائیں گی اور مسافر امیگریشن گیٹ سے بلا روک ٹوک گزر جائیں گے۔‘

    ’مسافر ای پاسپورٹ ای گیٹ پر رکھیں گے تو معلومات سکین ہونے کے بعد دروازہ کھل جائے گا، پھر وہ اگلے گیٹ پر جا کر فنگر پرنٹس لگائیں گے اور کیمرے کے سامنے کھڑے ہوں گے تو وہ گیٹ بھی کھل جائے گا۔‘

    ان کا کہنا تھا کہ ’پاکستان میں ای گیٹس کی تنصیب ای پاسپورٹ کی لانچنگ کے بعد سول ایوی ایشن کی جانب سے کی جائے گی ۔ اس کے بعد مسافر ای گیٹ سہولت سے مستفید ہونا شروع ہو جائیں گے۔‘

    اس سلسلے میں متعلقہ مشینری محکمہ پاسپورٹ میں نصب کر دی گئی ہے۔

    وزیر داخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ پاکستان نے وزارت داخلہ میں بارڈر مینجمنٹ ونگ قائم کردیا، یکم مئی سے ای پاسپورٹ کا آغاز کر رہا ہے، ای پاسپورٹ سے انسانی اسمگلنگ روکنے میں بہت ملے گی۔

    ڈائریکٹر جنرل پاسپورٹ اینڈ امیگریشن ڈاکٹر نعیم رؤف نے ایک انٹرویو میں بتایا کہ کہ ’وزیراعظم عمران خان کی منظوری کے بعد ای پاسپورٹ پر ہنگامی طور پر کام شروع کیا گیا تھا اور اس کی جلد تکمیل ایک بہت اہم پیش رفت ہے۔‘

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.

Comments are closed, but trackbacks and pingbacks are open.