• This topic is empty.
Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #14904
    Farhan Khan
    Participant

    ویب ڈیسک — امریکہ کے کیوبا میں قائم قید خانے گوانتاناموبے میں قید سب سے پرانے قیدی 73 سالہ پاکستانی سیف اللہ پراچہ کو رہا کرنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔

    امریکی اخبار نیویارک ٹائمز کے مطابق بائیڈن انتظامیہ نے گوانتاناموبے کے سب سے پرانے قیدی سیف اللہ پراچہ اور عبدالربانی کی رہائی کی منظوری دی۔

    تہتر سالہ سیف اللہ پراچہ تقریباً سترہ برس سے بدنام زمانہ جیل گوانتاناموبے میں قید ہیں اور امریکی فورسز نے اِنہیں تھائی لینڈ سے پکڑا تھا جبکہ دوسرے قیدی چوون سالہ عبدالربانی کو کراچی سے پکڑ کر لے جایا گیا تھا۔

    سیف اللہ پراچہ کی وکیل شلبی سولوین بنس کا کہنا تھا کہ ان کے ہمراہ دو دیگر افراد کو بھی قیدیوں کی معاملات کی جانچ کرنے والے بورڈ نے کلیئر قرار دیا ہے۔

    دونوں قیدیوں پر کسی قسم کا کوئی الزام ثابت نہیں ہوا۔ حکام کی جانب سے اب تک یہ نہیں بتایا گیا ہے کہ دونوں کی رہائی کب تک ممکن ہے۔

    سیف اللہ پراچہ امریکہ میں بھی مقیم رہے تھے جب کہ ان کی نیو یارک میں جائیداد بھی تھی۔ وہ پاکستان میں کاروبار کرتے تھے۔ جب کہ وہ دولت مند شخصیت مانے جاتے تھے۔

    گوانتانامو بے جیل میں 2003 میں 700 قیدی تھے جن کی تعداد مسلسل کم ہوتی رہی ہے۔ اس وقت وہاں 40 قیدی ہیں جن میں سیف اللہ پراچہ بھی شامل ہیں۔

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.

Comments are closed, but trackbacks and pingbacks are open.