Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #8275
    admin
    Keymaster

    بنگلہ دیش کے سیلاب کی پیش گوئی اور انتباہی مرکز کے سربراہ عارف الزمان بھویان نے بتایاہے کہ ایک دہائی کی ریکارڈ طوفانی بارشوں سے بنگلہ دیش کا ایک تہائی حصہ زیر آب آگیا ہے۔

    غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق بنگلہ دیش کے سیلاب کی پیش گوئی اور انتباہی مرکز کے سربراہ عارف الزمان بھویان نے بتایا کہ یہ ایک دہائی کا بدترین سیلاب ہے، شدید بارشوں کی وجہ سے دو اہم ہمالیائی دریا متاثر ہوئے، برہم پتر اور گنگا، جو بھارت اور بنگلہ دیش سے گزرتے ہیں، عارف الزمان کا کہنا تھا کہ سیلاب سے متاثرہ بنگلہ دیش کا ایک تہائی حصہ زیر آب آگیا ہے اور گاﺅں کے گھروں اور سڑکوں کے ساتھ کم از کم 15 لاکھ افراد متاثر ہوئے ۔ضلعی انتظامیہ کے ایک عہدیدار فاروق احمد نے کو بتایا کہ شمال وسطی بنگلہ دیش میں دریائے برہم پتر معمول سے 40 سینٹی میٹر اونچی ہے اور جس سے اس کے پھٹنے کا خطرہ تھا۔

    انہوں نے بتایا کہ زیادہ تر دیہاتی اپنے سیلاب سے متاثرہ گھروں کے قریب ہی رہنے کی کوشش کر رہے ہیں تاہم تقریبا 15 ہزار شدید متاثرہ علاقوں سے نقل مکانی کرگئے۔10 روز کی پیشگوئی کے ساتھ بڑھتے ہوئے پانی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے عارف الزمان نے کہا کہ اگر مزید دریاﺅں کے کنارے پھٹ گئے تو ملک کا 40 فیصد حصہ انتہائی خراب صورتحال میں سیلاب کی زد میں آسکتا ہے۔

    شمالی قصبے بسوامبھر پور کے دیہاتیوں نے بتایا کہ شمال مشرقی بنگلہ دیش کا ایک بڑا دریا سورما کے کنارے پھٹ جانے کے بعد زیادہ تر مکانات جزوی طور پر زیر آب آگئے تھے۔

     

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.