Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #18526
    admin
    Keymaster

    سعودی عرب میں اونٹ کلب کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین فہد بن حثلین نے ٹویٹر پر اپنے اکاونٹ کے ذریعے اونٹوں کو اجرت (کرائے) پر دینے کے تاریخی معاہدے کے بارے میں انکشاف کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ آج کا دن اس لفظ کےاونٹوں کی دنیا کے حوالے سے تمام معنی میں ایک تاریخی دن ہے۔ عبداللہ بن عودہ نے اپنا اونٹ 48 گھنٹوں کے لیے اجرت پر دیا۔ اس نے انجینیر عبداللہ الدبوس سے اونٹ کے کرائے کی مد میں 20 ملین ریال کی رقم وصول کی۔ابن حثلین نے ایک ویڈیو کلپ شائع کیا جس میں عبداللہ بن عودہ اور عبداللہ الدبوس کے درمیان بیس ملین ڈالر کے معاہدے کی تکمیل اور بن عودہ کی جانب سے چیک کی وصولی کو دکھایا گیا۔انہوں نے مزید کہا کہ اگرہم اونٹوں کو اپنے بچوں کی طرح سمجھیں تو یہ معاشی فہرست میں نہیں آتے۔ ہم انہیں نہ تو کرائے پر دیتے ہیں اور نہ ہی بیچتے ہیں۔ ہمیں اونٹوں کے بارے میں اپنا نظریہ بدلنا چاہیے۔ مجھے امید ہے کہ تمام مالکان عبداللہ بن عودہ کی مثال پر عمل کریں گے۔عبداللہ بن عودہ نے 20 ملین ریال کی رقم میں دق اور جل کے تمام سنگلز کرائے پر دینے کا اعلان کیا۔

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.