• This topic has 0 replies, 1 voice, and was last updated 1 week, 3 days ago by Syed Muhammad.
Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #9424
    Syed Muhammad
    Moderator

    ویب ڈیسک: سعودی عرب یکم جنوری 2021ء کے بعد اپنے شہریوں کو تمام زمینی، سمندری راستوں اور ہوائی اڈوں سے بیرون ملک جانے اور پھر واپس آنے کی اجازت دے دے گا لیکن اس کی شرط یہ ہوگی کہ تمام بین الاقوامی مسافروں کرونا وائرس سے بچاؤ کے لیے تمام ضروری احتیاطی تدابیر کی پاسداری کرنا ہوگی۔

    العربیہ ڈاٹ نیٹ اور  سعودی پریس ایجنسی کے مطابق ’’یکم جنوری کے بعد تمام بحری بندرگاہوں ، زمینی گذرگاہوں اور فضائی اڈوں کو ٹرانسپورٹ کے تمام ذرائع آمد ورفت کے لیے کھول دیا جائے گا اور شہریوں کے ملک سے باہر جانے اور واپس آنے پرعاید پابندیوں کو مکمل طور پر ختم کردیا جائے گا۔‘‘

    ایس پی اے نے بیان میں مزید کہا ہے کہ ’’یکم جنوری 2021ء سے 30 روز قبل پابندیاں ہٹانے کی مخصوص تاریخ کا اعلان کردیا جائے گا۔وزارت صحت ہوائی اڈوں کے ہالوں ، بندرگاہوں اور بس اسٹیشنوں پر مسافروں کے لیے پیشگی حفاظتی احتیاطی تدابیر کا نفاذ کرے گی۔‘‘

    کارآمد ویزوں کے حامل خلیج تعاون کونسل کے رکن ممالک کے شہری اور غیر سعودی مملکت میں کام ، اقامت یا زیارات کے لیے داخل ہوسکیں گے اور یہاں سے بیرون ملک جاسکیں گے۔البتہ انھیں کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے حفاظتی احتیاطی تدابیراور حکومت کے مقرر کردہ قواعد وضوابط کی پاسداری کرنا ہوگی۔

    ان میں سے ایک ضابطے کے تحت کسی بھی ایسے شخص کو مملکت میں داخلے کی اجازت نہیں ہوگی جس کے پاس کووِڈ-19 سے پاک ہونے کا ثبوت نہیں ہوگا۔بین الاقوامی مسافروں کے پاس کرونا وائرس کے ٹیسٹ کا منفی نتیجہ 48 گھنٹے سے زیادہ پرانا نہیں ہونا چاہیے۔

    سعودی عرب کرونا وائرس کی وَبا کی نئی پیش رفت کی روشنی میں بعد میں بتدریج عمرے کی اجازت دینے کے بارے میں منصوبہ کا اعلان کرے گا۔

    واضح رہے کہ سعودی عرب نے کرونا وائرس کی وَبا کو پھیلنے سے روکنے کے لیے مارچ کے اوائل میں اپنی سرحدیں بند کردی تھیں اور فضائی سروس معطل کردی تھی اور 20 مارچ کو اندرون ملک تمام پروازیں معطل کردی تھیں۔انھیں کوئی سوا دو ماہ کے بعد مئی میں بحال کیا گیا تھا۔تاہم ابھی تک سعودی عرب میں بین الاقوامی پروازوں کی آمد ورفت بحال نہیں کی گئی ہے۔

    سعودی عرب کی قومی فضائی کمپنی نے مملکت میں آنے والے بین الاقوامی مسافروں کے لیے تین ستمبر کو کووِڈ-19 کی وَبا سے متعلق رہ نما ہدایات جاری کی تھیں۔سعودی ائیر لائنز نے کرونا وائرس کی وَبا پھیلنے کے بعد مارچ سے اپنی بین الاقوامی پروازیں بند کررکھی ہیں۔

    سعودی وزارتِ صحت کے مطابق مملکت میں اتوار تک کرونا وائرس کے کل تشخیص کیسوں کی تعداد 325651 ہوچکی ہے۔ ان میں سے 302870 مریض تن درست ہوچکے ہیں جبکہ 4228 مریض وفات پا چکے ہیں۔سعودی عرب میں گذشتہ دو ہفتوں سے کووِڈ-19 کے یومیہ کیسوں کی تعداد میں مسلسل کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.