Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #9862
    admin
    Keymaster

    دبئی (پاک جرگہ، 5th October, 2020) سرکاری محکمے اور نیم سرکاری شعبے کی فرمیں اب نئے آنے والوں کے لئے ورک پرمٹ حاصل کر سکتی ہیں۔

    فیمیلز بھی بیرون ملک سے لائے جانے والے گھریلو ملازمین کے لئے ورک پرمٹ حاصل کر سکتی ہیں۔

    ملک کی اہم امیگریشن ایجنسی ، فیڈرل اتھارٹی برائے شناخت اور شہریت (آئی سی اے) نے پیر کو اس اقدام کا اعلان کیا۔

    آجر حالات اور پیشے کے لحاظ سے بیرون ملک سے کچھ بھرتیاں کر چکے ہیں لیکن وبائی مرض کی وجہ سے غیر ملکی کارکنوں کو بڑے پیمانے پر ملک میں لانا مشکل ہوگیا ہے۔

    گھریلو ملازمین جو ملازمت کی پیش کش قبول کرتے ہیں انہیں ورک پرمٹ دیا جائے گا۔ ملک میں رہنے والوں کے ورک پرمٹ کی تجدید پہلے ہی شروع  کی جا چکی ہے۔

    ورک پرمٹ ایک دستاویز ہے جو غیر ملکی کو کسی خاص مدت کے لئے قانونی طور پر ملک میں داخلے ، قیام اور کام کرنے کی اجازت دیتا ہے۔

    ورک پرمٹ عام طور پر دو مہینوں کے لئے جاری کیے جاتے ہیں۔ اس دوران سپانسر کو ملازم کی حیثیت اقامتی ویزا میں بدلنی ہوتی ہے، جس سے وہ عام طور پر دو یا تین سال تک ملک میں رہ سکتے ہیں۔

    متحدہ عرب امارات نے کوویڈ ۔19 کے پھیلاؤ کو محدود کرنے کے لئے مارچ میں ہر قسم کے ورک پرمٹ اور سیاحوں کے داخلے کو روک دیا تھا۔

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.