Jirga Pakistan

Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #10102
    admin
    Keymaster

    وزیراعظم عمران خان نے قومی احتساب بیورو اور عدالتوں سے کہا ہے کہ وہ بدعنوانی کے بڑے مقدمات کو جلد ان کے منطقی انجام تک پہنچائیں۔

    انہوں نے ہفتے کے روز اسلام آباد میں ٹائیگرفورس کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس ملک کے لوگ لوٹی گئی دولت کی واپسی چاہتے ہیں۔

    وزیراعظم نے یقین دلایا کہ حکومت عدالتوں اور نیب کو ہر طرح کا لاجسٹک تعاون فراہم کرنے کیلئے تیار ہے۔

    حزب اختلاف کی جماعتوں کی اعلی قیادت کے حوالے سے وزیراعظم نے کہا کہ انہوں نے گزشتہ 30سال صرف ملک لوٹا تاہم ابھی تک ان کے مقدمات کا فیصلہ نہیں ہوا ہے۔

    انہوں نے کہا کہ عدالتیں اور نیب خودمختار ادارے ہیں تاہم وہ ان اداروں کو مزید مستحکم بنائیںگے جو ان بدعنوان عناصر کے احتساب کے لئے ان کے براہ راست کنٹرول میں ہیں۔

    وزیراعظم نے کہا کہ اب ان کی یہ کوشش ہوگی کہ نواز شریف کو وطن واپس لایا جائے اور انہیں عام جیل میں رکھا جائے۔

    وزیراعظم نے آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی کے خلاف نواز شریف کی طرف سے استعمال کئے گئے الفاظ پر گہرے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے انہیں مسلح افواج پر حملہ قرار دیا۔

    نواز شریف کی طرف سے بری فوج کے سربراہ اور ڈی جی آئی ایس آئی کے خلاف استعمال کی گئی زبان پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم نے اسے مسلح افواج پر حملہ قرار دیا۔

    عمران خان نے کہاکہ ہمارے سیکورٹی اہلکار ملک کے امن وسلامتی کیلئے قربانیاں دے رہے ہیں۔

    انہوں نے کہا کہا یک روز قبل ہی 20سیکورٹی اہلکار شہید ہوئے ہیں۔

    عمران خان نے کہا کہ آرمی چیف نے کراچی میں حالیہ سیلاب سمیت مشکل وقت میں حکومت کی بھرپور حمایت کی ہے۔

    حزب اختلاف کی جماعتوں کی طرف سے انتخابی دھاندلی کیالزامات کو مسترد کرتے ہوئے عمران خان نے کہاکہ آزاد اداروں نے قرار دیا ہے کہ 2018 کے انتخابات 2013 کی نسبت کہیں بہتر تھے۔

    انہوں نے کہا کہ اس بار دائر کی گئیں انتخابی عرضداشتوں کی تعداد 2013 کے انتخابات میں دائر کی گئی عرضداشتوں کے مقابلے میں نصف ہے۔

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.

Comments are closed, but trackbacks and pingbacks are open.