Jirga South Asia

  • This topic is empty.
Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #10492
    Zaid
    Moderator

    نئی دہلی : پولیس نے  بھارتی ریپبلک میڈیا نیٹ ورک کے ایڈیٹر ان چیف اور منیجنگ ڈائریکٹر ارنب گوسوامی کو 2018 کے ایک معاملے میں خودکشی کرنے کے الزام میں گرفتار  کر لیا ہے ۔ 

    تفصیلات کے مطابق گوسوامی پر بھارتی تعزیرات ہند (آئی پی سی) کی دفعہ 306 اور دفعہ 34 کے تحت الزام عائد کیا گیا تھا۔  پولیس نے ارنب کی رہائش گاہ پر چھاپہ مارا اور اسے رائے آباد پولیس اسٹیشن لے  گئی۔

    ریپبلک ٹی وی کے ذریعے  ارنب گوسوامی کو زبردستی پولیس وین میں ڈالنے کے مناظر دکھائے گئے۔ چینل نے صبح 8.42 منٹ پر  ٹویٹ کیا کہ  “انکاؤنٹر پولیس نے ارنب گوسوامی کے  گرفتار ہونے کی تصدیق کردی ہے”۔ خیال کیا جاتا ہے کہ یہ مقدمہ 2018 میں درج خودکشی کے معاملےسے جڑا ہے” ۔ 

    گوسوامی نے دعویٰ کیا کہ ممبئی پولیس نے ان پر جسمانی تشدد کیا۔ ریپبلک ٹی وی نے اطلاع دی ہے کہ قریباَ 10 پولیس اہلکار ارنب کے گھر میں داخل ہوئے اور  ارنب گوسوامی کو باہر آنے کا کہا ، جیسے ہی وہ باہر آئے انہیں دھکیل کر پولیس وین میں پکڑ لیا۔

    ممبئی پولیس نے رپبلک  کے ایگزیکٹو ایڈیٹر نرنجن نارائن سوامی اور سینئر ایسوسی ایٹ ایڈیٹر سنجے پاٹھک کو ارنب کی رہائش گاہ میں داخل ہونے سے روک دیا۔ پولیس کی 8 گاڑیاں اور کم سے کم 40-50 پولیس اہلکار ارنب کے عمارت کے احاطے میں موجود ہیں ، متعدد مسلح افراد۔ جب نرنجن نے کہا کہ اطلاع دینا ان کا حق ہے تو انہیں عمارت سے باہر دھکے دے کر نکال دیا گیا ۔

    واضح رہے کہ ارنب گوسوامی اور ممبئی پولیس نے پالگھڑ میں تین سادھووں کی کٹائی ، سوشانت سنگھ راجپوت کیس اور ریپبلک ٹی وی کے ٹی آر پی گھوٹالہ میں ملوث ہونے کے الزامات سمیت متعدد معاملات پرمیں مطلوب ہیں۔

    This article originally appeared on Neo News

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.

Comments are closed, but trackbacks and pingbacks are open.