Viewing 1 post (of 1 total)

  • Author
    Posts
  • #9480
    admin
    Keymaster

     

    71 سالہ سوگا نے دیرینہ اتحادی Shinzo Abe کی جگہ لی ، جو اپنی صحت کی وجہ سے سبکدوش ہو گئے ہیں۔

    ٹوکیو (پاک جرگہ، 16th September, 2020) ملک کی پارلیمنٹ کے ایوان زیریں نے بدھ کے روز Yoshihide Suga کو جاپان کے اگلے وزیر اعظم کے طور پر منتخب کر لیا ہے۔ انہوں نے Shinzo Abe کی جگہ لی ہے، جنہوں نے صحت خراب ہونے کی وجہ سے استعفیٰ دے دیا تھا۔ انہوں نے ملک کی معاشی پالیسیوں کو جاری رکھنے کا عزم کیا ہے۔

    اسٹرابیری کسان کے بیٹے، 71 سالہ یوشی ہیڈے سوگانے پیر کو گورننگ لبرل ڈیموکریٹک پارٹی (LDP) کی قیادت کا مقابلہ جیت لیا۔

    کئی سالوں کے معاشی جمود اور دنیا کی سب سے عمر رسیدہ آبادی کے طویل مدتی اثرات سے نبرد آزما جاپان کو کوڈ 19 کی وجہ سے شدید معاشی دھچکا لگا ہے۔

    دنیا کی تیسری سب سے بڑی معیشت اس سال اپریل سے جون کے دوران ریکارڈ 27.8 فیصد کی کمی کا شکار ہوئی ہے۔

    اپنے پیشروؤں کے برعکس ، سوگا کسی مراعات یافتہ پس منظر سے نہیں آیا اور اپنے کسی طاقتور دھڑے سے تعلق رکھے بغیر ایل ڈی پی کی چوٹی پر پہنچے ہیں۔

    اگرچہ سوگا کو بہت زیادہ چست و چالاک اور پر جوش سیاستدان نہیں سمجھا جاتا لیکن ان کے متعلق مشہور ہے کہ وہ بہت قابل اور پریکٹیکل انسان ہیں۔

    انھوں نے کم از کم اجرت کو بڑھانے، زرعی اصلاحات متعارف کرانے اور سیاحت کو بڑھانے کا بھی وعدہ کیا ہے۔

    خارجہ پالیسی کے متعلق بہت توقع ہے کہ وہ ایبے کی پالسیاں ہی جاری رکھیں گے، جس میں امریکہ کے ساتھ بہت عرصے سے جاری اتحاد کو اولین ترجیح جاری رہے گی اور چین کے ساتھ مستحکم تعلقات ہوں گے۔

    اب جبکہ پارٹی نے اپنا لیڈر منتخب کر لیا ہے تو بدھ کو پارلیمان میں ایک اور ووٹ ہو گا، جہاں سوگا ایل ڈی پی کی اکثریت کی وجہ سے تقریباً یقینی طور پر وزیرِاعظم بن جائیں گے۔
     
     

Viewing 1 post (of 1 total)
  • You must be logged in to reply to this topic.